پاکستان اور ترکی کے وزرا خارجہ کی مشترکہ پریس کانفرنس

اسلام آباد، ستمبر 14( اے پی پی ): وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے پاکستان اور ترکی کے وزرا خارجہ کی مشترکہ پریس کانفرنس کے موقع پر کہا ہے کہ پاکستان اور ترکی کے درمیان مثالی اور تاریخی تعلقات ہیں ، ترکی ہمارے د ±کھ اور سکھ میں ہمیشہ ہمارے ساتھ رہا ہے۔دونوں ممالک کی مشترکہ آواز ہے جس کے پیچھے ، ثقافت، اور مذہب جیسی مضبوط بنیاد ہے

وزارت خارجہ میں منعقد ہونے والی پریس کانفرنس کے موقع پر شاہ محمود قریشی کا کہنا تھا کہ ترکی نے پاکستان کا مختلف فورمز بشمول ہالینڈ میں توہین آمیز کارٹون کی اشاعت روکنے میں ہمارا ساتھ دیا پاکستان کے مووقف کی حمائیت پر ترکی کا شکریہ ادا کرتا ہوں۔

انہوں نے افغانستان پر بھی ہمارے موقف کی حمائیت اور کشمیر پر بھی ترکی کی جانب سے واشگاف حمائیت کا شکریہ ادا کیا اور بتایا کہ اقوام متحدہ کے اجلاس کے موقع پر کشمیر کونٹیکٹ گروپ کے اجلاس میں بھی ترک وزیر خارجہ تشریف لائیں گے

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے مزید کہا کہ آج کی ملاقات میں دوطرفہ معاشی تعاون اور دفاعی تعلقات، دو طرفہ تجارت کو مزید بڑھانے اور ایف ٹی ایس معاہدے پر عملدرآمد پر بات ہو ئی ۔ آج طے پایا کہ ہم سٹراٹیجک اکنامک کونسل کو فعال کریں گے اور پاک ترک مشترکہ ورکنگ گروپ اس سلسلے میں اپنے کام کا آغاز کرے گا

شاہ محمود قریشی نے کہا کہ پاکستانی اور ترک نوجوان سفارت کار وں کےلئیے دوطرفہ منصوبہ برائے تربیت سازی بھی شروع کریں گے

اس موقع پر بات کرتے ہوئے ترک وزیر خارجہ کا کہنا تھا کہ پاکستان آکر بہت خوشی ہوئی، یہ ہمارا دوسرا گھر ہے۔نئی حکومتی قیام پر آپکی پارٹی اور عمران خان صاحب سے ملاقات بھی ہوگی اور وزیر اعظم سے ملاقات میں انکو مبارک باد اور تعاون کا اظہار کروں گا۔

ترک وزیر خارجہ نے کہا کہ حکومتیں بدلتی رہتی ہیں، مگر اصل دوستی عوام کے درمیان ہوتی ہے اور پاکستان اور ترکی کے عوام کے درمیان یہ دوستی لازوال ہے اور ہمیشہ قائم رکھی جائے گی۔

ترک وزیر خارجہ نے کہا کہ آج ہم نے فیصلہ کیا کہ پاک ترک مشترکہ معاشی کونسل کا چھٹا اجلاس پاکستان میں ہوگا۔ انشا اللہ طے پا جانے والے دوطرفہ معاملے اور فری تجارتی معاہدے کو عملی جامہ پہنایا جائے گا۔

ترک وزیر خارجہ نے کہا کہ اس وقت پاک فضائیہ کے چیف ترکی میں ہیں۔ترکی پاکستان کو ہیلی کاپٹر دے گا اور او آئی سی میں بھی ہم دونوں ممالک مل ±کر کردار ادا کرتے رہیں گے۔

اس موقع پر صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیتے ہوئے پا کستانی وزیر خارجہ نے کہا کہ پاکستان اور ترکی کے کئی مشترکہ مسائل ہیں اور ہم ان مسائل کو ±مشترکہ کوششوں سے حل کریں گے۔ پاکستان ترکی اور افغانستان کا سہ فریقی گروپ بھی آگے بڑھ رہا ہے۔

اے پی پی / سعیدہ / حمزہ

وی این ایس