معذور افراد کی سہولیات سے متعلق بل جلد اسمبلی میں پیش کریں گے:ڈاکٹر شیریں مزاری

31

اسلام آباد7 دسمبر(اے پی پی):وفاقی وزیرانسانی حقوق ڈاکٹر شیریں مزاری نے کہا ہے کہ معذور افراد کے بنیادی حقوق یقینی بنانے کیلئے کابینہ نے قانون سازی کی منظوری دے دی ہے اور جلد ہی پارلیمنٹ سے بھی منظوری کے لئے پیش کردیا جائے گا۔ ڈاکٹر شیریں مزاری نے کہا کہ اصل مشکل قوانین کے نفاذ میں ہے لیکن حکومت عمل درآمد کو یقینی بنائے گی۔ان خیالات کا اظہار ڈاکٹر شیریں مزاری نے معذور خواتین کے مسائل سے متعلق منعقدہ تقریب سے  بطور مہمان خصوصی اپنے خطاب میں کیا۔ تقریب میں اقوام متحدہ عورت فاﺅنڈیشن کی ایگزیکٹو ڈائیریکٹر فمزاور دیگر بھی موجود تھے۔

ڈاکٹر شیریں مزاری نے کہا کہ کابینہ نے معذور افراد کیلئے بل کی منظوری دے دی ہے جو جلد پارلیمنٹ سے منظور کرایا جائے گا۔ریاست کی ذمہ داری ہے کہ تمام لوگوں کو برابری کے حقوق دے۔پاکستان میں قانون کی عملدرآمد کا اصل مسئلہ ہے۔پارلیمنٹ سے پاس کرانے کہ بعد اس قانون پر عمل کرایا جائے گا۔ بل میں معذور افراد کو تمام بنیادی سہولتیں فراہم کرنے کی شقیں موجود ہیں۔معذور افراد کو بل کے ذریعے اے ٹی ایم تک خاص رسائی دی جارہی ہے۔بل میں سپیشل ایجوکیشن کی بھی شق موجود ہے۔

ڈاکٹر مزاری نے کہا کہ ہمارے معاشرے میں عورت خاندان کی دیکھ بال کرتی ہے۔اگر عورت خود معذور ہو جائے تو اس کودیکھ بال کی ضرورت ہوتی ہے۔ہمیں معذور افراد کیلئے سوچ کو تبدیل کرنے کی ضرورت ہے۔

اے پی پی/احسان/حامد بلال

وی این ایس اسلام آباد