نجی ہسپتالوں سے مہنگا علاج کروانے کی بجائے مریض اب سرکاری ہسپتالوں کا رخ کررہے ہیں ۔ ڈائریکٹر ایچ ایم سی

39

پشاور۔12فروری (اے پی پی) حیات آباد میڈیکل کمپلیکس پشاور کے ڈائر یکٹر پروفیسر شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ اب مریض پرائیویٹ ہسپتالوں سے مہنگا علاج کروانے کی بجائے سرکاری ہسپتالوں کا رخ کررہے ہیںاور ہماری پوری کوشش ہوتی ہے کہ مریض کو بہتر سے بہتر طبی سہولیات فراہم کی جائیں ۔منگل کے روز میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ ایچ ایم سی کا اپنا سنٹر لا ئز ڈ سٹرلائزیشن سپلائی ڈیپارٹمنٹ ( سی ایس ایس ڈی ) ہے جہاں پر تمام آپریشن تھیٹر کے آلات جراحی کے علاوہ دیگر خصوصی سامان کو حفظان صحت کے اصولوں کے مطابق سٹر لائزیشن کے عمل سے گزارہ جاتا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ آلات جراحی کے کنٹینرکے علاوہ آپریشن تھیٹر کے گاون پیکنگ اور دیگر اشیاء کی سٹر لائز یشن کی جانچ کیلئے تمام اشیاء کے پیکٹ پر ایک سٹرلائز ٹیب نصب کی جاتی ہے اور سٹر لائزیشن کے عمل سے گزرنے کے بعد ٹیب پرموجود لکیریںواضح  ہوجاتی ہیں جوکہ مکمل سٹر لائزیشن کی نشاندہی کرتی ہیں اور اس سارا عمل کا مقصد مریضوں کو موذی ومتعدی امراض سے بچانا ہے۔ ایچ ایم سی کے ڈینٹل ڈیپارٹمنٹ کے انچارج پروفیسر مشتاق خٹک نے میڈیا کو بتایاکہ دانتوں کے جملہ امراض میں مبتلا مریضوں کی ایچ ایم سی آمدمیں اضافہ ہوتا جارہاہے۔ انہوں نے کہاکہ گزشتہ سال ہسپتال میں تقریباََ گیارہ ہزار27دانتوں کے مریضوںکاعلاج کیاگیا ۔ انہوں نے کہاکہ روزنہ کی بنیاد پر دانتوں کی او پی ڈی میں تقریباََ 72 سے 85 مریض آتے ہیں ۔ ڈاکٹر مشتاق نے کہاکہ ڈینٹل ڈیپارٹمنٹ میں مختلف آپریشن بھی کے جاتے ہیں جن میں ایکسیڈنٹ سے متاثرہ چہرے کی ٹوٹی ہڈیوں کی سرجری ‘ چہرے کے سرطان ‘ چہرے کی خوبصورتی ‘ پیدائشی چہرے کے نقائص ‘ تھوک کے غدود ‘ منہ ‘ جبڑے کی مختلف رسولیوںاور زبان کی سرجری کے علاوہ دانتوں کی امپلانٹ بھی کی جاتی ہے ۔ انہوں نے کہاکہ دانتوں کی ہرقسم کی سرجری ‘ فلنگ ‘ آرسی ٹی ‘ فکسڈدانت اوردانتوںکی صفائی کا کام بھی یہاں پرتسلی بخش طورپر کیا جاتا ہے ۔ انہوں کہاکہ موذی و متعدی امراض کے سدباب کیلئے ڈینٹل ڈیپاٹمنٹ میں مریض کی باقاعدہ سکر یننگ کے ساتھ ساتھ ڈیپارٹمنٹ میں آلات کی سٹر لائزیشن کیلئے عملے کی ہفتہ وار ڈیوٹی مقرر کی گئی ہے ۔

 

/ صائمہ حیات/ریحانہ اے پی پی

وی این ایس پشاور