پاکستانی اشیائے خوردنی اور ٹیکسٹائل مصنوعات کو سعودی مارکیٹ سے فائدہ اٹھانا چاہئے: راجہ علی اعجاز

5

جدہ ، 10مئی (اے پی پی ):سعودی عرب میں پاکستان کے سفیر راجہ علی اعجاز نے کہا ہے کہ پاکستانی  اشیائے خوردنی اور ٹیکسٹائل کی مصنوعات کیلئے سعودی عرب میں بڑی مارکیٹ ہے اور ہمارے  برآمد کنندگان کو اس مارکیٹ سے فائدہ اٹھانا چاہئے۔

ان خیالات کا اظہار انھوں نے یہاں جمعہ  کے روزپاکستانی صحافیوں کے ساتھ ملاقات کے دوران  کہی۔انہوں نے کہا کہ پاکستان رائس ایکسپورٹر ایسوسی ایشن کے وفد کا حالیہ دورہ اسی سلسلے کی کڑی تھی اور اس سے  ہمارے رائس اکسپورٹر کی سعودی عرب میں رسائی بڑھی  ہے۔

کچھ کمپنیوں میں پاکستانی کارکنوں کے مسائل کے بارے میں ایک سوال پر، سفیر نے بتایا کہ وہ ذاتی طور پر ان کمپنیوں کے سربراہان  سے رابطہ میں ہیں اور یقین دہانی کروائی   کہ پاکستانی کارکنوں کے مفادات کا تحفظ کیا جائے گا۔

سعودی عرب میں لیبر کی ضروریات پر ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ سعودی عرب تیزی سے بڑھتی ہوئی معیشت ہے اور بڑھتی ہوئی معیشت میں مزدور کا اہم کردار ہوتا ہے. انہوں نے کہا کہ ہمیں سعودی عرب کو زیادہ پڑھے لکھے اور تربیت یافتہ  کارکن بھیجنے کی ضرورت ہے۔

 انہوں نے کہا کہ سعودی حکومت کے ساتھ قیدیوں کی منتقلی  کےمعاہدے پر گفت و شنید جاری ہے  اور  امید ہے کہ یہ جلد ہی اسکو حتمی شکل دے دی جائے گی۔

سفیر پاکستان نے کمیونٹی کے معاملات میں صحافیوں کی طرف سے دکھائی جانے والی دلچسپی کی تعریف کی اور کہا کہ میڈیا پاکستانی کمیونٹی کے مسائل کو حل کرنے میں اس کی تعمیری کردار ادا کرے۔

سورس: وی این ایس،جدہ