ملک بھر کی طرح سکھر میں بھی بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طور پر منایا گیا

0
78

سکھر ، 15 اگست (اے پی پی) : ملک بھر کی طرح سکھر میں بھی بھارت کا یوم آزادی یوم سیاہ کے طور پر منایا  گیا۔ اس سلسلے میں سکھر کی مختلف سیاسی   اور سماجی تنظیموں نے شہر کے مختلف علاقوں سے ریلیاں نکالیں ۔

مختلف سیاسی جماعتوں کی جانب سے کشمیریوں سے اظہار یکجہتی کے لیے جلسہ منعقد کیا گیا جس میں مختلف سیاسی جماعتوں کے کارکنوں اور شہریوں نے سیکڑوں کی تعداد میں  شرکت کی ۔جلسے میں ہندو سکھ اور عیسائی برادری کے رہنما اور افراد نے  کثیر تعدادمیں شرکت کرکے کشمیریوں سے  اظہار یکجہتی کیا ۔

جلسے سے پاکستان پیپلز پارٹی کے مرکزی رہنما سید خورشید احمد شاہ ،مسلم لیگ فنکشنل کی مرکزی رہنما و ایم پی اے نصرت سحر عباسی، صوبائی وزیر ٹرانسپورٹ سید اویس قادر شاہ، ایم این اے نعمان اسلام شیخ، ایم پی اے سید فرخ شاہ، میئر سکھر ارسلان شیخ، فنشکنل لیگ کے صوبائی رہنما سید شفقت حسین شاہ کے علاوہ ہندو برادری کے رہنما ایشور لعل، سکھ برادری کے رہنما سردار رمیش سنگھ ودیگر مقررین نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر کے معاملے پر پیچھے نہیں ہٹ سکتے ،اس مسئلے پر پاکستان کی پوری قوم اور تمام سیاسی جماعتیں ایک ہیں ۔مسلمانوں کا قتل عام چاہے کشمیر میں ہو یا فلسطین میں ہو ہمیں قبول نہیں۔

 پیپلزپارٹی  کے رہنما خورشید شاہ نے کہا کہ ہماری طاقت کشمیریوں کے لیے آزادی کا جذبہ بنتی ہے اور ہمیں اپنی طاقت کو برقرار رکھنا ہوگا تاکہ کشمیریوں کو حوصلہ ملتا رہے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم آزادی سے لے کر آج تک کشمیر کے حقوق کے لیے لڑتے رہے ہیں۔ بھٹو نے اندرا گاندھی سے کہا تھا کہ ہم کشمیر کی آزادی کے لیے لڑتے رہیں گے ہمیں اس وقت ہر چیز بھلا کر آگے بڑھنا ہوگا تاکہ کشمیر آزاد ہو ۔جلسے میں خیرپور اور لاڑکانہ سمیت اندرون سندھ سے نکالی گئی ریلیوں کے شرکاء نے بھی شرکت کی۔

سورس : وی این ایس ، سکھر