وزیرِ اعظم کی زیر صدارت اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لانے کے حوالے سے اجلاس

0
31

اسلام آباد ، 8 نومبر (اے پی پی): وزیرِ اعظم عمران خان کی زیر صدارت اشیائے ضروریہ کی قیمتوں میں کمی لانے اور عوام کو ریلیف فراہم کرنے کے حوالے سے جمعہ کو اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس میں وزیرِ اعظم کو بنیادی اشیائے ضروریہ (آٹا، گھی، چینی، چاول اور دالوں)کی قیمتوں کی موجودہ صورتحال اور ان میں کمی لانے کے حوالے سے اقدامات پر تفصیلی بریفنگ دی گئی۔

 چیئرمین اور منیجنگ ڈائریکٹر یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن نے بتایا کہ حکومت کی جا نب سے چھ ارب روپے فوری طور پر فراہم کرنے سے بنیادی ضروری اشیا  کی قیمتوں میں  واضح کمی لائی جاسکے گی۔ اجلاس میں وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ حکومت کی جانب سے فنڈز کی فوری فراہمی سے بیس کلو آٹے کی قیمت میں 132روپے، چینی کی فی کلو قیمت میں 09روپے، گھی کی قیمت فی کلو 30 روپے، چاول کی فی کلو قیمت میں 20روپے اوردالوں کی قیمت میں 15روپے تک کمی سے یہ اشیا ء یوٹیلیٹی اسٹورز سے عوام کو فراہم کی جائیں گی۔

وزیرِ اعظم کو یوٹیلیٹی اسٹورز میں کرپشن کے سدباب اور اشیاءکی خوردبرد روکنے اور عوام تک اشیائے ضروریہ کی وافر سپلائی یقینی بنانے کے لئے اٹھائے جانے والے اقدامات پر تفصیلی طور پر بریف کیا گیا۔ وزیرِ اعظم کو بتایا گیا کہ یوٹیلیٹی اسٹورز کے لئے بڑی مقدار میں اشیاءکی خرید کے بعد اس بات کو یقینی بنایا جا رہا ہے کہ وہ یوٹیلیٹی اسٹورز کے وئیر ہاوسز (گوداموں) تک پوری مقدار میں پہنچیں جہاں ان کی خصوصی پیکنگ ہو کر یوٹیلیٹی اسٹورز تک ترسیل کی جائے گی۔ ان اقدامات کا مقصد یوٹیلیٹی اسٹورز سے جہاں کرپشن کا تدارک ہے وہاں اشیا کا معیار بھی یقینی بنانا ہے۔

اس موقع پر وزیرِ اعظم نے ہدایت کی کہ یوٹیلیٹی اسٹورز سے کرپشن کے مکمل خاتمے کے لئے انفارمیشن ٹیکنالوجی کو بروئے کار لایا جائے۔ وفاقی وزیرِ مواصلات مراد سعید نے بتایا کہ چار ہزار یوٹیلیٹی اسٹورز کے نیٹ ورک کے علاوہ ملک بھر میں پھیلے آٹھ سو پوسٹ آفسز کو بھی اشیائے ضروریہ کی فراہمی کے لئے استعمال کیا جا سکتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ بہت جلد پاکستان پوسٹ آفس کی جانب سے اشیاءضروریہ کی گھروں تک فراہمی کے لئے ہوم ڈیلیوری سروس بھی شروع کر دی جائے گی۔

 وزیرِ اعظم عمران خان نے کہا کہ عوام کو ریلیف فراہم کرنا حکومت کی اولین ترجیح ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری پوری کوشش ہے کہ کم آمدنی والے افراد اور غربت سے متاثرہ خاندانوں کو خصوصی ریلیف فراہم کیا جائے۔ وزیرِ اعظم نے کہا کہ معیشت کی صورتحال کے پیش نظر حکومت نے مشکل فیصلے کیے۔ ان فیصلوں کی وجہ سے آج معیشت میں استحکام ہے اور اقتصادی اعشاریے بہتری ظاہر کر رہے ہیں،آئندہ دنوں میں اس میں مزید بہتری آئے گی۔ مشکل حالات کے باوجود عوام کو ریلیف فراہم کرنے کی ہر ممکنہ کوشش جاری رکھی جائے گی۔وزیرِ اعظم نے یوٹیلیٹی اسٹورز انتظامیہ کو ہدایت کی کہ حکومت کی جانب سے چھ ارب روپے کی فوری فراہمی کے بعد اشیاء ضروریہ کی عوام تک دستیابی کو جلد از جلد یقینی بنایا جائے۔

اجلاس میں وفاقی وزیر منصوبہ بندی و ترقی مخدوم خسرو بختیار، وفاقی وزیرِ مواصلات مراد سعید، وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے سماجی فلاح و بہبود ڈاکٹر ثانیہ نشتر، وزارتِ خزانہ، منصوبہ بندی، مواصلات، نیشنل فوڈ سیکیورٹی اور صنعت کے سیکرٹری و ایڈیشنل سیکرٹریوں ، چیئرمین و منیجنگ ڈائریکٹر یوٹیلیٹی اسٹورز کارپوریشن، چیف کمشنر اسلام آباد اور دیگر سینئر افسران نے شرکت کی۔

سورس: وی ا ین ایس، اسلام آباد