اپنے کشمیری بھائیوں کی بھر پور حمایت کرتے ہیں: ہائی کمشنر ڈاکٹر عبدالمالک

0
185

ویلنگٹن ،06فروری)  اے پی پی ):نیوزی لینڈ کے شہر ویلنگٹن میں پاکستانی سفارتخانے کی جانب سے “مقبوضہ کشمیر یوم یکجہتی” کے موقع پر ایک خصوصی تقریب کا اہتمام کیا جس کے تحت بھارتی مقبوضہ جموں و کشمیر کے عوام سے اظہار یکجہتی کیا گیا جو اپنے حق خود ارادیت کے لئے جدوجہد کر رہے ہیں اور بھارتی حکومت کی طرف سے ریاستی دہشت گردی کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔  ویلنگٹن اور پامرمن نارتھ میں مقیم پاکستانیوں اور کشمیریوں کی تعداد میں بڑی تعداد نے اس تقریب میں شرکت کی۔

 نیوزی لینڈ میں پاکستان کے ہائی کمشنر ڈاکٹر عبدالمالک نے اپنے تاریخی نقطہ نظر کے ساتھ 5 فروری کو منائے گئے یوم یکجہتی کشمیر کی اہمیت کی وضاحت کرتے ہوئے بتایا کہ پاکستانی 1990 کے بعد سے ہر سال اس دن کو مناتے ہیں تاکہ اپنے عہد کو جاری رکھنے کے عہد کی تجدید کریں،اپنے کشمیری بھائیوں کی بھر پور حمایت کرتے ہیں جو اپنے خود ارادیت کے انمول حق کو حاصل کرنے کے لئے پرامن جدوجہد میں مصروف ہیں۔

 ہائی کمشنر نے وضاحت کی کہ مودی سرکار نے اس علاقے کو فوجی محاصرے میں رکھا ، ، لاکھوں کشمیریوں کو گھروں تک محدود کردیا گیا جبکہ ہزاروں افراد کو گرفتار کرلیا گیا ،  بدستور کرفیو ، پابندیوں اور مواصلات کی بندش نے کشمیر میں انسانیت سوز بحران کا باعث بنا۔

 انہوں نے کہا کہ بھارت کے 5 اگست کو ہونے والے تناؤ کے بعد انسانی حقوق کی بدترین صورتحال نے 55 سالوں میں پہلی بار اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کو اس معاملے پر بات کرنے کے لئے خصوصی اجلاس طلب کرنے پر مجبور کیا۔

 ہائی کمشنر نے پاکستان کی اخلاقی ، سفارتی اور سیاسی حمایت کا اعادہ کیا اور کہا کہ پاکستان نے ہمیشہ کشمیریوں کی امنگوں کی نمائندگی کی ہے۔ انہوں نے کہا کہ یوم یکجہتی کشمیر منانے سے ہندوستان کو یہ واضح پیغام ملتا ہے کہ اسے کشمیریوں کے حق خود ارادیت کو تسلیم کرنا ہوگا اور اقوام متحدہ کے چارٹر اور اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قراردادوں کے مطابق اس مسئلے کو حل کرنا ہوگا۔

سورس:وی این ایس