کشمیر پریمیئر لیگ اور شاہد آفریدی فاؤنڈیشن کے درمیان ایم او یو پر دستخط ہوگئے

189

اسلام آباد،29دسمبر  (اے پی پی):کشمیر پریمیئر لیگ اور شاہد آفریدی فاؤنڈیشن کے درمیان منگل کو ایم او یو پر دستخط ہوگئے۔ مقامی ہوٹل میں منعقد ہ تقریب میں قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد آفریدی، چیئرمین کشمیر پریمئیر لیگ عارف ملک اور دیگر نے شرکت کی۔

  ایم او یو پر دستخط کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے قومی کرکٹ ٹیم کے سابق کپتان شاہد خان آفریدی نے کہا کہ کشمیر پریمیئر لیگ اور شاہد آفریدی فاؤنڈیشن کے درمیان ایم او یو پر دستخط ہونا خوش آئند ہے، بہت سی لیگز کا حصہ بنا ہوں لیکن کشمیر پریمیئر لیگ کے لیے بہت خواہش تھی، میری کوشش ہوگی کہ جتنا زیادہ ہوا میں کشمیر پریمیئر لیگ کے لیے کرنے کی کوشش کروں گا۔ انہوں نے کہا کہ میرا دل کر رہا ہے کہ کشمیر پریمیئر لیگ کی ہر فرنچائز کے ساتھ کھیلوں،کشمیر پریمیئر لیگ میں کھیلنے کی شرط میں نے رکھی ہے کہ کشمیر میں کرکٹ اکیڈمی بنے گی،کشمیر میں نہ صرف سپورٹس بلکہ صحت کے شعبے میں بھی کام کرنے کا پلان ہے۔

شاہد آفریدی نے کہا کہ میری سب سے درخواست ہے کہ کشمیر پریمیئر لیگ کو مکمل سپورٹ کریں، سپورٹس کے علاؤہ صحت کے حوالے سے بھی کشمیر میں کام کروں گا،  میڈیا لیگ کو سپورٹ کریں یہ ہماری عزت کا معاملہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ میں انسانیت کے لیے کام کرنا چاہتا ہوں، میں جو کام کر رہا ہوں اسکی وجہ سے جب تک زندگی ہے میں اپنی ذات میں خود وزیراعظم رہوں گا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کے اندر میچز ہونگے تو کشمیر کو فائد ہ ہوگا، میچز مظفر آباد میں ہونا چاہئیں۔

 شاہد آفریدی نے کہا کہ آخری دفعہ جب آزاد کشمیر گیا تو ڈیڑھ کلومیٹر دور ظلم کی انتہا تھی،بھارت نے جموں کشمیر میں ظلم کی انتہا کر دی ہے، دنیا میں کہیں بھی ناانصافی ہو رہی ہو تو ووہاں ہمیں آواز اٹھانی چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ مجھے کوئی فکر نہیں کہ پڑوسی ملک میں کام مکمل ملے گا یا نہیں،ایسا وقت ضرور آئےگا جب کشمیریوں کو آزادی ملے گی،حکمرانوں کی ذمہ داری ہے کہ کشمیریوں کے حق کے لیے دوبارہ آواز اٹھائیں، جب میں کوروناوائرس کے دنوں میں کام کر رہا تھا تو لوگ کہہ رہے تھے کہ یہ وزیراعظم بننا چاہتا ہے،مستحق لوگوں کو ان کا حق دلانا سیاست سے بڑا کام ہے،میں مستحق لوگوں کے لیے کام کرتا رہوں گا اور ہمیشہ وزیراعظم رہوں گا۔

شاہد آفریدی  نے کہا کہ    میں کشمیر میں کرکٹ اکیڈمی ضرور بناؤں گا۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر میں صحت کا بہت بڑا مسئلہ ہے اور میں کشمیر میں بھی صحت کے لیے کام کروں گا۔انہوں نے کہا کہ  میری خواہش ہے کہ کشمیر پریمیئر لیگ کشمیر میں ہی ہونی چاہیے،اگر کشمیر پریمیئر لیگ ہورہی ہے تو کشمیر میں میچوں کا فائدہ ہوگا۔  اگر لائٹس نہیں بھی لگیں تو دن میں مظفرآباد میں میچ ہونے چاہئیں۔  انہوں نے کہا کہ صدر آزاد کشمیر اور وزیر اعظم آزاد کشمیر کو کشمیر پریمیئر لیگ کے لیے آگے آنا ہوگا۔

  تقریب سے خطاب کرتے ہوئے        چیئرمین کشمیر پریمیئر لیگ عارف ملک نے کہا کہ کشمیر پریمیئر لیگ کے حوالے سے 5جنوری کو میرپور، 6جنوری کو باغ ، 7جنوری کو مظفرآباد میں ٹرائلز ہوں گے۔انہوں نے مزید کہا کہ لیگ میں شرکت کے لئے ہزاروں کی تعداد میں نوجوان ٹرائلز میں حصہ لیں گے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر پریمیئر لیگ کے ذریعے نوجوان کھلاڑی ڈومیسٹک ٹیم اور پھر پی ایس ایل میں بھی کھیلیں گے۔ کشمیر پریمیئر لیگ کے دوران بھی فنڈ ریزنگ کا کام کیا جائے گا۔

  اس موقع پر چیف ایگزیکٹیو کشمیر پریمیئر لیگ شہزاد اختر نے کہا کہ شاہد آفریدی سے جڑنے کے بعد ہم اپنے کاز کو بہتر سے بہتر طریقے سے نبھائیں گے۔