پاکستان میں خواتین کو بااختیاربنانا  اولین ترجیحات میں شامل ہے؛  وفاقی وزیر شازیہ مری

2

اسلام آباد،10نومبر  (اے پی پی):وفاقی وزیر  برائے تخفیف غربت و سماجی تحفظ شازیہ مری نے کہا ہے کہ پاکستان میں خواتین کو بااختیاربنانا ہماری اولین ترجیحات میں شامل ہے۔

آئس لینڈ میں گلوبل فورم ویمن لیڈرشپ سے خطاب کرتے ہوئے  وفاقی وزیر نے کہا کہ پاکستان کو  بارشوں کے باعث بڑے پیمانے پر  سیلاب  سے بہت نقصان ہوا جو  پاکستان میں اس سے پہلے کبھی نہیں  ہوا ، سیلاب کے باعث3کروڑ 30لاکھ(33ملین)افراد بے گھر ہوئے، جو کئی ممالک کی کل آبادی سے زیادہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ متاثرہ افراد میں تقریباً 6 لاکھ 50 ہزار حاملہ خواتین کو زچگی سے متعلق  سہولیات کی ضرورت ہے ۔

 شازیہ مری نے کہا کہ انہیں پاکستان کے سب سےکامیاب  سماجی تحفظ کے پروگرام   بینظیر انکم سپورٹ پروگرام(بی آئی ایس پی) کی سربراہ ہونے پر  فخر ہے، پاکستان کے تقریباً 80 لاکھ خاندان بی آئی ایس پی سے  منسلک ہیں ،ہم ان خاندانوں کو   کیش ریلیف فراہم کر رہے ہیں،بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام(بی آئی ایس پی ) کے ذریعے  عوام کو غذائیت اور تعلیم کی ترغیب دینے کی کوشش کر رہے ہیں۔