سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں امدادی سرگرمیوں،  اشیاء خوردنی اور امدادی اشیا کی فراہمی کے لیے صوبائی حکومتوں سے خصوصی تعاون کیا جائے ،  وزیراعظم محمد شہباز شریف

4

لاہور۔1اکتوبر  (اے پی پی):وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے ہدایت کی ہے کہ اشیاء خوردنی اور امدادی اشیا کی فراہمی کے لیے صوبائی حکومتوں سے خصوصی تعاون کیا جائے تاکہ امدادی سرگرمیوں کے دوران درپیش مسائل کو حل کیا جا سکے،  سیلاب متاثرین کو نقد امداد اور امدادی اشیا کی فراہمی میں کٹوتیوں سے متعلق شکایات کو دور کیا جائے، سیلاب کی تباہ کاریوں سے ہونے والے نقصانات کا تخمینہ جلد از جلد مکمل کریں۔وزیر اعظم آفس کے میڈیا ونگ کی طرف سے جاری بیان کے مطابق یہ بات وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے اپنی  زیر صدارت  سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں لوگوں کی امداد اور بحالی کی سرگرمیوں کے  جائزہ اجلاس کے دوران کہی۔  وزیراعظم نے سیلاب سے متاثرہ افراد کو خوراک اور امدادی اشیا کی بلاتعطل فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے خصوصی ہدایات جاری کیں۔ وزیراعظم نے ہدایت کی کہ اشیاء خوردنی اور امدادی اشیا کی فراہمی کے لیے صوبائی حکومتوں سے خصوصی تعاون کیا جائے تاکہ امدادی سرگرمیوں کے دوران درپیش مسائل کو حل کیا جا سکے۔ وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے سیلاب کے بعد اشیائے خوردونوش کی قیمتوں میں اضافے کا نوٹس لیتے ہوئے اشیائے خوردونوش کی قیمتوں کے تعین میں حائل مسائل فوری حل کرنے کی ہدایت کی۔ انہوں نے صوبائی حکومتوں کے ساتھ مل کر امدادی سرگرمیوں میں شامل لوگوں اور امداد کی فراہمی کے دوران سیکیورٹی بڑھانے کی ہدایات جاری کیں۔ انہوں نے سیلاب متاثرین کو نقد امداد اور امدادی اشیا کی فراہمی میں کٹوتیوں سے متعلق شکایات کو بھی دور کرنے کا حکم دیا۔ انہوں نے حکام سے کہا کہ وہ سیلاب کی تباہ کاریوں سے ہونے والے نقصانات کا تخمینہ جلد از جلد مکمل کریں۔ نیشنل فلڈ رسپانس کوآرڈینیشن سینٹر کے حکام نے ملک بھر میں سیلاب سے متاثرہ علاقوں میں بحالی کے کاموں کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی۔ اجلاس میں وفاقی وزیر اقتصادی امور سردار ایاز صادق، وزیر اطلاعات و نشریات مریم اورنگزیب، وزیر مملکت برائے خارجہ امور حنا ربانی کھر، کوآرڈینیٹر نیشنل فلڈ رسپانس اینڈ کوآرڈینیشن سنٹر میجر ظفر اقبال، چیئرمین نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی لیفٹیننٹ جنرل اختر نواز، صوبائی چیف سیکرٹریز اور متعلقہ حکام نے شرکت کی۔