سندھ میں 13 سالوں سے تعلیم مکمل طور پر تباہ ہے؛ اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ

12

گھوٹکی ، 25ستمبر (اے پی پی ):اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ نے  کہا ہے کہ  سندھ میں 13 سالوں سے تعلیم مکمل طور پر تباہ ہے، سندھ حکومت نے 35 سو والی  ڈیسک 29 ہزار میں فراہم کی ہے۔

ان خیالات کا اظہار اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ نے   پریس کلب اوباڑو میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ 3 سال سے میں اپنے ناکردہ گناہ میں یہاں عدالتوں کے چکر لگارہا ہوں۔انہوں نے کہا کہ ضلع گھوٹکی کراچی کے بعد سب سے زیادہ ٹیکس دینے والا ضلع ہے، اربوں کی رائلٹی سالوں میں آئی ہے مگر رائلٹی کو خرچ کرنے کے لیے ایک کمیٹی بنی ہے، رائلٹی کے پیسے مجھے اس شہر پر لگتے ہوئے نظر نہیں آرہے بلکہ ایم این ایز اور ایم پی ایز کے بنگلوں پر لگ رہے  ہیں۔

حلیم عادل شیخ  نے  کہا کہ  ضلع گھوٹکی آج کھنڈر کا نمونا پیش کررہا ہے،  سی پیک روڈ بن گئی لیکن افسوس کی بات ہے، سی پیک سے شہر آنے والی لنک سٹرکیں نہیں بنی ،یہاں کی ایڈمنسٹریشن ناکام ہوچکی ہے، سندھ حکومت لکڑ ہضم پتھر ہضم کی مثال ہے، بڑے بڑے ادارے جو یہاں موجود ہیں ان میں نوکریاں وڈیروں کو دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ  اوباوڑو سمیت ضلع گھوٹکی کی عوام کے لیے آواز اٹھاتے رہیں گے۔

اپوزیشن لیڈر سندھ اسمبلی حلیم عادل شیخ نے کہا کہ  پی ٹی آئی سے نظریات والے نوجوان اوباوڑو میں موجود ہیں، پی ایس 18 کی اس سیٹ سے ہم بھرپور تیاری کررہے ہیں، بلدیاتی اور جنرل الیکشن میں ضلع گھوٹکی سوئیپ کریں گے۔انہوںنے کہا کہ  پیپلزپارٹی نے سندھ کی تعلیم کا معیار ختم کردیا ہے، سارے زیر تعلیم وزیر وزیر تعلیم بن گئے ہیں ،پچھلے 13 سالوں میں تعلیم مکمل تباہ ہے، اسکولوں میں سہولیات موجود نہیں، سندھ حکومت نے 35 سو والی ڈیسک 29 ہزار میں دیتے ہیں، 29 ہزار سے غریب کی بیٹی کا آدھا جہیز آجاتا ہے جبکہ  آئی بی اے کے اندر بھی کافی معاملات خراب ہوچکے ہیں۔

حلیم عادل شیخ  نے کہا کہ  سندھ کو تحریک انصاف ہی ٹھیک کرے گی۔انہوں نے کہاکہ  کوووڈ کے باعث دنیا بھر میں معاشی حالات خراب ہوئے،کووڈ 19 ایک قدرتی آفت ہے تاہم پورے خطے میں آج بھی سب سے کم پیٹرول کا ریٹ پاکستان کا ہے، آج کسان کی حالت بہتر ہورہی ہے، ملک کی معیشت بہتر ہورہی ہے۔

 قبل ازیں اپوزیشن لیڈر میرپور ماتھیلو کورٹ میں پیش ہوئے جہاں گواہان کے بیانات مکمل ہونے پر عدالت نے سماعت 25 اکتوبر تک ملتوی کردی ۔اس موقع پر اپوزیشن لیڈر کے ہمراہ پی ٹی آئی رہنماء افتخار لنڈ ایڈووکیٹ اجمل سولنگی بھی موجود تھے۔