برآمد کنندگان کے مسائل کے حل کے لئے ضروری انفراسٹرکچر اور موثر ون ونڈو آپریشن جیسی سہولیات فراہم کرکے سرمایہ کاری کی ترغیب دی جائے گی؛ وزیراعظم شہباز شریف

3

کراچی،20مئی  (اے پی پی):وزیر اعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ برآمد کنندگان کے مسائل کے حل کے لئے ضروری انفراسٹرکچر اور موثر ون ونڈوز آپریشن جیسی سہولیات فراہم کرکے سرمایہ کاری کی ترغیب دی جائے گی۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے جمعہ کو کاروباری برادری  کے ایک گروپ کے اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کیا۔  اجلاس میں ملک کو درپیش مالیاتی چیلنجز سے نمٹنےکے  حوالے سے مشاورت کی گئی ۔ وزیر اعظم نے تاجر برادری پر زور دیا کہ وہ   برآمدی شعبوں جیسا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی اور زراعت  کی ترقی پر توجہ دیں۔ انہوں نے اس مقصد کے لئے ملک کے تمام حصوں میں ایکسپورٹ انڈسٹریل زونز تیار کرنے کا وعدہ کیا جس میں برآمد کنندگان کو ان کے مسائل کے حل کے لئے ضروری انفراسٹرکچر اور موثر ون ونڈوز آپریشن جیسی سہولیات فراہم کرکے سرمایہ کاری کی ترغیب دی جائے گی۔

وزیر اعظم شہباز شریف نے  گرین اور قابل تجدید توانائی کی پیداوار کے لیے شمسی اور ہوا کے شعبوں کو ترقی دینے کی ضرورت پر بھی زور دیا کیونکہ پاکستان تیل کی درآمد پر سالانہ 20 ارب ڈالر خرچ کرنے کا متحمل نہیں ہے۔انہوں نے اس بات پر روشنی ڈالی کہ حکومت کی جانب سے لگژری اور غیر ضروری اشیائے ضروریہ کی درآمد پر پابندی کے فیصلے سے سالانہ 4 بلین ڈالر کی بچت ہوگی جو پام آئل کی سالانہ درآمد کے لئے کافی ہے۔

وزیراعظم نے خواہش ظاہر کی کہ تاجر برادری سمیت پوری قوم ہماری مخدوش سماجی و اقتصادی حالت کو بہتر بنانے کے لئے دن رات محنت کرے کیونکہ آگے بڑھنے کا یہی واحد راستہ ہے۔

سورس:و ی  این ایس، اسلام آباد